سندھلیانوالی؛ نیا پاکستان بنانے والے مخالفین کو نشانہ بنا رہے ہیں تبدیلی سرکار کے جعلی دعویدار ہر بدعنوانی کے گرو ہیں پیر سید قطب علی شاہ المعروف پیر علی بابا ایم پی اے

سندھلیانوالی؛ نیا پاکستان بنانے والے مخالفین کو نشانہ بنا رہے ہیں تبدیلی سرکار کے جعلی دعویدار ہر بدعنوانی کے گرو ہیں اپوزیشن اور حکومتی افراد کے لئے قانون کا مطلب الگ الگ ہے۔قانون کی حکمرانی کہاں ہے ،غریب کو انصاف اس کی دہلیز پر کہاں مل رہا ہے حکمران ریاست مدینہ کی گردان کرتے نہیں تھکتے ان خیالات پیر سید قطب علی شاہ المعروف پیر علی بابا ایم پی اے نے اپنے بیان میں کیا کہا ہے انہوں نے کہا نیا پاکستان اور تبدیلی لانے والوں نے عوام کے مسائل حل کرنے کے بجائے سارا زور اور توانائیاں مخالفین کو انتقام کا نشانہ بنانے پر مرکوز کردی ہیں جبکہ ملک ایک بار پھر اندھیروں میں ڈوبنے لگا ہے سیاسی افراتفری ملک کے مسائل میں بڑھانے کا سبب بن رہی ہے۔ملک کی تعمیروترقی کے لئے مثبت سیاسی رویوں کی ضرورت سے انکار ممکن نہیں سیاسی مخالفت میں ملکی مفادات کے منافی بیانات و اقدامات سے ملک کی ترقی کو نقصان ہورہاہے ملک میں کرپشن اورلوٹ مار ہے،لاقانونیت ہے۔ انتظامی صلاحیتوں کا بحران ہے۔قانون کی عمل داری نہیں ہے نااہل حکمرانوں کی خواہش کہ آؤمیرے ملک میں سرمایہ کاری کرو بہت فائدہ ہوگا تصور کیاجاسکتا ہے کہ سرمایہ دارکس طرح ملک میں سرمایہ داری کرسکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ملک دشمن عناصر کی خواہش بھی یہی ہے کہ پاکستان کو دہشت گرد،کرپٹ اور غیرسنجیدہ قرار دلوا کر عالمی برادری سے پابندیا ں لگوادیں۔اور الزامات کی سیاست کرنے والے جانے انجانے میں کیا اسی ایجنڈہ پر عمل پیرا تو نہیں انہوں نے کہا کہ ہمارے سیاسی رویے ،اندازگفتگو اور انداز سیاست کو مثبت رکھ کر ملک کی تعمیروترقی میں اپنا مثبت کردارا دا کرنا ہی سیاست کا محور ہوسکتا ہے ۔جس سے ہرسطح پر عوام کے مسائل کے حل ،اپنے علاقہ ،شہر،صوبہ اور ملک کی تعمیروترقی میں اپنا بھرپورکردار ادا کیا جاسکتا ہے۔تحریک انصاف کی حکومت عوام کو ریلیف دینے کی بجائے تکلیفیں دینے پر تلی ہوئی ہے وفاقی اور پنجاب حکومت نے تجاوزات کے حوالے سے دوہرا معیار اپنا رکھا ہے بااثر کو چھوٹ کمزور کو رگڑا لگایا جا رہا ہے،حکمران طاقت کے بل بوتے پر اپنی غیرقانونی تعمیرات کو ریگولائیزیشن کے نام پر تحفظ جبکہ غریبوں کی جھگیوں کو مسمار کروا کر انہیں بے گھر کیا جا رہا ہے انہوں نے مطالبہ کیا کہ فوری طور پر حکمران جماعت کی بدعنوانیوں کو ظاہر کرنے کے لئے بھی کوئی جے آئی ٹی تشکیل دیکر پوری قوم کو حقائق سے آگاہ کیا جائے

اپنا تبصرہ بھیجیں