پیرمحل؛ضلع بھر میں وسیع وعریض پیرمحل کا جنرل بس اسٹینڈ انتظامیہ کی غفلت کا شکار ٹوٹی پھوٹی سڑکیں خستہ حال دکانیں انتظامیہ کی غفلت کا شکار

پیرمحل؛ضلع بھر میں وسیع وعریض پیرمحل کا جنرل بس اسٹینڈ انتظامیہ کی غفلت کا شکار ٹوٹی پھوٹی سڑکیں خستہ حال دکانیں انتظامیہ کی غفلت کا شکار بااثر اے سی بس مالکان نے لاری اڈاکے باہر متبادل اڈا بنا کر سرکاری خزانے کو لاکھوں روپے ماہانہ نقصان پہنچانا شروع کردیا تفصیل کے مطابق پنجاب بھر کے بس اسٹینڈ پر ایک روٹ کوآنے جانے کے لیے صرف ایک ایک بیسمنٹ الاٹ ہوتا ہے مگر پیرمحل جنر ل بس اسٹینڈ میں آر ٹی سیکرٹری اقصٰٰی غفور کی موٹر وہیکل ایگزامینر اظہر نواب اور میونسپل کمیٹی چیف آفیسر طارق محمود کمبوہ کے ہمراہ لاری اڈا میں آنے کے باوجود بااثر افراد جن کے پاس مسافر گاڑیاں بھی نہ ہے انتظامیہ کی ملی بھگت سے درجنوں بیس منٹ الاٹ کررکھے ہے جن میں ایک ایک روٹ پر جانے کے لیے پانچ سے چھ چھ تک بیس منٹ مخصوص ہونے کے باعث کئی روٹوں پر گاڑی مالکان لڑائی جھگڑوں کے باعث عدم تحفظ کا شکار ہے بااثر اے سی روڈ لائنر مالکان نے جنرل بس اسٹینڈ کے باہر غیر قانونی طورپر متبادل اڈے بنا کر سرکاری خزانے کو لاکھوں روپے ماہانہ کا نقصان پہنچایاجارہا ہے بلکہ لاری اڈا کے باہر بس اسٹینڈ آئے روز حادثات کا باعث بن رہے ہیں آرٹی سیکرٹری اقصیٰ غفور نے لاری اڈا کا دورہ کرکے انتظامیہ کو شیڈ بنانے کی ہدایات کی مگر اپنی ذمہ داریاں پورا کرنا گوارانہ کیا لاری اڈا کے باہر متبادل پرائیویٹ اڈاجات کو ختم نہ کیا جبکہ لاری اڈا کے اندر سڑکیں ٹوٹ پھوٹ چکی ہے جبکہ دکانیں جس کا ہزاروں روپے ماہانہ کرایہ ہے خستہ حال ہونے کے باعث کسی بھی وقت کوئی سانحہ رونما ہوسکتا ہے انتطامیہ تمام تر صورتحال جاننے کے باوجود کسی قسم کی کاروائی سے گریزاں ہے سیاسی سماجی فلاحی حلقوں نے ڈپٹی کمشنر ٹوبہ ٹیک سنگھ سے مطالبہ کیا کہ فی الفور جنرل بس اسٹینڈ کے باہر ناجائز اے سی روڈ لائنر کے اڈاجات کو ختم کروایاجائے تاکہ شہری کسی بھی ممکنہ بڑے حادثات کے واقعات سے بچ سکیں اور میونسپل کمیٹی چیئرمین لاری اڈا پیرمحل کے اندر بیسمنٹ کو فی الفور نئے سرے سے الاٹ کرتے ہوئے ایک روٹ پر ایک بیس منٹ کی پالیسی کو رائج کریں تاکہ حکومت کو ماہانہ لاکھوں روپے کا فائدہ پہنچ سکے

اپنا تبصرہ بھیجیں